اتوار, مئی 05, 2013

" محبت کی حقیقت "

" محبت کرنے سے پہلے اپنے آپ کو محبت کیے جانے کے قابل بناؤ "
زندگی میں جس سے بھی محبت کرو یہ سوچ کر کبھی نہ کرنا کہ وہ اس کے بدلے تم سے بھی  محبت کرے گا۔ تم   اُس سے اس لیے محبت کرتے ہو کہ وہ محبت کیے جانے کے قابل ہے۔ لیکن! ایک پل کو یہ سوچ لو کہ تم بھی اس قابل ہو یا نہیں کہ کوئی تم سے محبت کر سکے۔
 یہی ہمارا المیہ بھی ہے کہ ہم محبت کرنے کے بعد ویسی ہی محبت ملنے کی توقع بھی پال لیتے ہیں- بجا محبت پر اختیار نہیں یہ کی نہیں جاتی بس ہو جاتی ہے۔۔۔ یہ جانے بنا کہ کوئی کیسا ہے- خود کو نہیں بدل سکتے تو کم از کم اپنی محبت کو ہی اس قابل بنا دوکہ کوئی تمہاری محبت سے محبت کرنے لگ جائے اور تمہاری محبت کی طاقت تمہیں عاشق سے محبوب کے منصب پر فائز کر دے -

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں

" اعجازِآیاتِ قرانی"

٭قرآن مجید کی  سورہ الحجر(15) کی آیت (9)  میں اللہ نے حفاظت قرآن کا وعدہ لیا ہے۔ آیت ترجمہ۔"ہم نے یہ نصیحت اُتاری ہے اور ہم ہی اس کے...